Upload Cover

Khanasifjohi`s Uploads

  • دل ڈھونڈھتا ہے پھر وہی فرصت کے رات دن
    دل ڈھونڈھتا ہے پھر وہی فرصت کے رات دن دل ڈھونڈھتا ہے پھر وہی فرصت کے رات دن
    khanasifjohi 00:06:57 39 0 Downloads 0 Comments
  • دل نے تجھے یاد کیا آ بھی جا آ بھی جا نا رُلا
    دل نے تجھے یاد کیا آ بھی جا آ بھی جا نا رُلا دل نے تجھے یاد کیا ہو او او او دل نے تجھے یاد کیا آ بھی جا آ بھی جا اے صنم نا رُلا آ بھی جا آ بھی جا اے صنم نا رُلا
    khanasifjohi 00:05:21 46 0 Downloads 0 Comments
  • نا جانے کیا ہُوا جو تونے چُھو لیا لتا منگیشکر
    نا جانے کیا ہُوا جو تونے چُھو لیا لتا منگیشکر نا جانے کیا ہُوا جو تونے چُھو لیا لتا منگیشکر مووی درد 1981 موسیقار خیام نغمہ نگار نقاش لئلپوری (HD) نا جانے کیا ہوا جو تونے چھو لیا نا جانے کیا ہوا جو تونے چھو لیا کھلا گلاب کی طرح میرا بدن نکھر نکھر گئی سنور سنور گئی بنا کے آئینہ تُجھے اے جانِ من نا جانے کیا ہوا بکھرا ہے کاجل فضا میں بھیگی بھیگی ہیں شامیں بوندوں کی رمجھم سے جاگی آگ ٹھنڈی ہوا میں آ جا صنم یہ حسیں آگ ہم لیں دل میں بسا نا جانے کیا ہوا جو تو نے چھو لیا کھلا گلاب کی طرح میرا بدن نا جانے کیا ہوا جو تونے چھو لیا آنچل کہاں مین کہاں یہ مجھے ہوش کیا ہے یہ بے خدی تونے دی ہے پیار کا یہ نشہ ہے سُن لے ذرہ سازِ دل گا رہا ہے نغمہ تیرا نا جانے کیا ہوا جو تو نے چھو لیا کھلا گلاب کی طرح میرا بدن نا جانے کیا ہوا جو تونے چھو لیا کلیوں کی یہ سیج مہکے رات جاگے ملن کی کھو جائیں دھڑکن میں تیرے دھڑکنین میرے من کی آ پاس آ تیری ہر سانس میں ، میں جائوں سمائوں نا جانے کیا ہوا جو تو نے چھو لیا کھلا گلاب کی طرح میرا بدن نکھر نکھر گئی سنور سنور گئی بنا کے آئینہ تُجھے اے جانِ من نا جانے کیا ہوا جو تونے چھو لیا نا جانے کیا ہوا جو تونے چھو لیا نا جانے کیا ہوا جو تونے چھو لیا
    khanasifjohi 00:05:41 101 0 Downloads 0 Comments
  •  کُھلی جو آنکھ ، تو وہ تھا، نہ وہ زمانہ تھا فرحت عباس - عابدہ پروین
    کُھلی جو آنکھ ، تو وہ تھا، نہ وہ زمانہ تھا فرحت عباس - عابدہ پروین کُھلی جو آنکھ ، تو وہ تھا، نہ وہ زمانہ تھا دہکتی آگ تھی، تنہائی تھی، فسانہ تھا غموں نے بانٹ لیا تھا مجھے یوں آپس میں کہ جیسے میں کوئی لُوٹا ہُوا خزانہ تھا​ یہ کیا کہ چند ہی قدموں پہ تھک کے بیٹھ گئے تُمھیں تو ساتھ مِرا دُور تک نِبھانا تھا مجھے، جو میرے لہو میں ڈبو کے گزُرا ہے وہ کوئی غیر نہیں، یار اِک پُرانا تھا خود اپنے ہاتھ سے شہزاد اُس کو کاٹ دِیا کہ جس درخت کی ٹہنی پہ آشیانہ تھا
    khanasifjohi 00:06:55 53 0 Downloads 0 Comments
  • بہت دن ہو گئے دیکھا نہیں تمہیں گلزار
    بہت دن ہو گئے دیکھا نہیں تمہیں گلزار بہت دن ھو گئے دیکھا نہیں نہ ھی کوئی خط ملا. بہت دن ھو گئے ، سچی تیری آواز کی بُوچھاڑ میں بھیگا نہیں ھُوں میں۔ ”گلزار“ _____________________________________ ‎صرف ایک حسرتِ اظہار کے پرتَو ھیں میری غزلیں ھوں کہ نغمے کہ فسانے میرے
    khanasifjohi 00:00:26 40 0 Downloads 0 Comments
  • دل ۾ اڄ رات تنهجي ياد وري آ شايد، استاد منظور سخيراڻي
    دل ۾ اڄ رات تنهجي ياد وري آ شايد، استاد منظور سخيراڻي دل ۾ اڄ رات تنهجي ياد وري آ شايد، اُونداهيء رات ۾ ڪا چِڻگ ٻري آ شايد، ريء برسات سڄي رات پسيو آ دامن، دل کي اکڙين مان ڳجهو در يا دري آ شايد، تنهنجي وعدن جي اڃا اعتبار تي آهي، دل منهنجي نه آهي ڪا پٿرن جي ڀري آ شايد ڪير ايندو ڇو هتي ڪير سڏيندو مونکي، دل چري آهي خالي گهر کان ڊڳي آ شايد، تو پنهنجي شوق سان ها شوق سان ڪر ظلم ستم، ڪا تبسم ۾ اڃا ساهه زري آ شايد ​عبدالغفار تبسم
    khanasifjohi 00:08:54 102 0 Downloads 0 Comments
  • گلزار ہاتھ چھوٹیں بھی تو رشتے نہیں چھوڑا کرتے - جگجیت سنگھ
    گلزار ہاتھ چھوٹیں بھی تو رشتے نہیں چھوڑا کرتے - جگجیت سنگھ ہاتھ چھوٹیں بھی تو رشتے نہیں چھوڑا کرتے وقت کی شاخ سے لمحے نہیں توڑا کرتے جس کی آواز میں سِلوٹ ہو، نگاہوں میں شکن ایسی تصویر کے ٹکڑے نہیں جوڑا کرتے لگ کے ساحل سے جوبہتا ہے اُسے بہنے دو ایسے دریا کا کبھی رُخ نہیں موڑا کرتے جاگنے پر بھی نہیں آنکھ سے گرتیں کرچیں اس طرح خوابوں سے آنکھیں نہیں پھوڑا کرتے شہد جینے کا مِلا کرتا ہے تھوڑا تھوڑا جانے والوں کیلئے دِل نہیں تھوڑا کرتے جمع ہم ہوتے ہیں ، تقیسم بھی ہوجاتے ہیں ہم تو تفریق کے ہندسے نہیں جوڑا کرتے جاکے کہسار سے سرمارو کہ آواز تو ہو خستہ دِیواروں سے ماتھا نہیں پھوڑا کرتے
    khanasifjohi 00:05:29 60 0 Downloads 0 Comments
  •  قراءۃالعین & شجاع حیدر تیرے نال کیوں لایاں اکھیاں من مائل
    قراءۃالعین & شجاع حیدر تیرے نال کیوں لایاں اکھیاں من مائل Artist: Quratulain Balouch and Shuja Hyder OST Mann Mayal Song: Tere Naal Kyun Laayian Ankhian Lyrics and Composition: Shuja Hyder Editor: Mahmood Ali Post: Kashif Ahmed (Kashi) DOP: Zaib Rao
    khanasifjohi 00:00:05 2.94 K 0 Downloads 0 Comments
  •  sangeet انوپ جلوٹا براہ راست فجی محفل میں غزل مکھڑے
    sangeet انوپ جلوٹا براہ راست فجی محفل میں غزل مکھڑے Sangeet Shumaila Khan thanks آس جب بن کے توٹ جاتی ہے روح کس طرح کسمساتی ہے پوچھ اُس بدنصیب دلہن سے جِس کی بارات لوٹ جاتی ہے ظلمتِ شب کو ستاروں سے سنوارا ہم نے ، کتنی راتوں کو ، کتنی راتوں کو تجھے اُٹھ کے پکارا ہم نے کتنی راتوں کو تجھے اُٹھ کے پکارا ہم نے ظلمتِ شب کو ستاروں سے سنوارا ہم نے سَرَ جِس پے نا جھک جائے ، اُسے دَرَ نہیں کہتے ہر دَر پے جو جھُک جائے اُسے سَرَ نہیں کہتے کٹے گی یہ زندگی اب روتے روتے کٹے یہ اب زندگی روتے روتے یہ کہہ کر کئی ہیں خوشی روتے روتے کٹے یہ اب زندگی روتے روتے یہ کہہ کر کئی ہیں خوشی روتے روتے چاند انگڑائیاں لے رہا ہے ، چاند انگڑائیاں لے رہا ہے انگڑائیاں ، انگڑائیاں ، چاند انگڑائیاں لے رہا چاندنی مسکرانے لگی ہے چاند انگڑائیاں لے رہا ہے چاندنی مسکرانے لگی ہے ایک بھولی ہوئی سی کہانی پھر مجھے یاد آنے لگی ہے چاند انگڑائیاں لے رہا ہے چاندنی مسکرانے لگی ہے جام چلنے لگے دل مچلنے لگے چہرے چہرے پہ رنگِ شراب آ گیا بات کچھ بھی نا تھی بات اتنی ہوئی آج محفل میں وہ بے نقاب آ گیا آ آ آ آ آ آ آ گلشن تھا لالا زار ابھی کل کی بات ہے ہر گُل پے تھا نکھار ابھی کل کی بات ہے غزل میں ، غزل میں بندش و الفاظ ہی نہیں کافی غزل میں بندش و الفاظ نہیں کافی جگر خون بھی کچھ چاہیئے اثر کے لیئے تمہارے شہر کا موسم ، موسم موسم موسم موسم تمہارے شہر کا موسم تمہارے شہر کا موسم بڑا سہانہ لگے تمہارے شہر کا موسم برا سہانہ لگے میں ایک شام چُرا لوں اگر بُرا نا لگے ساغر سے صراحی ٹکراتی ، ساغر سے صراحی ٹکراتی بادل کو پسینہ آ جاتا تم زلف کو اگر بھکرا دیتے ساون کا مہینہ آ جاتا میں خد ہی اپنی تلاش میں ہوں ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔
    khanasifjohi 00:15:24 1.78 K 0 Downloads 1 Comments
  • سازینہ تو جو نہیں ہے تو کچھ بھی نہیں ہے
    سازینہ تو جو نہیں ہے تو کچھ بھی نہیں ہے تو جو نہیں ہے تو کچھ بھی نہیں ہے یہ مانا کہ محفل جواں ہے حسیں ہے نگاہوں میں تو ہے یہ دل جھومتا ہے نہ جانے محبت کی راہوں میں کیا ہے جو تو ہمسفر ہے تو کچھ غم نہیں ہے یہ مانا کہ محفل جواں ہے حسیں ہے وہ آئیں نہ آئیں جمی ہیں نگاہیں ستاروں نے دیکھی ہیں جھک جھک کے راہیں یہ دل بدگماں ہے، نظر کو یقیں ہے یہ مانا کہ محفل جواں ہے حسیں ہے (فیاض ہاشمی) Tu jo nahi hai to kuch bi nahi hai - Pakistani Karaoke
    khanasifjohi 00:01:02 337 0 Downloads 0 Comments
  • show more
khanasifjohi
  • khanasifjohi
  • profile viewed 1163 times
  • message share profile
Who to Follow
X